ذاتی مفاد کی خاطر من پسند افراد میں بند بانٹ کرنے کے خلاف شہریوں کا اے سی آفس کے باہر احتجاج

Pinterest LinkedIn Tumblr +

کہوٹہ؛() میونسپل کمیٹی کہوٹہ کے8کروڑ کے فنڈز کہوٹہ شہر کی کھنڈرات نما سڑکوں واٹر سپلائی اور کلر بائی پاس بنانے میں خرچ نہ کرنے اور ذاتی مفاد کی خاطر من پسند افراد میں بند بانٹ کرنے کے خلاف شہریوں کا اے سی آفس کے باہر احتجاج جبکہ اس سے قبل کہوٹہ کے نوجوانوں نے بھی ذبح خانہ تا کلر چوک تک احتجاجی ریلی نکالی تھی اسسٹنٹ کمشنر کہوٹہ رابعیہ سیال کے دفتر کے باہر احتجاجی مظاہرہ کرنے والوں میں سابق کونسل ایم سی ملک عبدالراؤف، راجہ خورشید عالم، ملک منیر اعوان، ناظم قمر، راجہ عمران ستار ایڈووکیٹ، راجہ عبداللہ ابراہیم ایڈووکیٹ، راجہ رومان سعید، ذولفقار ستی، راجہ مجیب اللہ ستی، ملک حسام کے علاوہ کثیر تعداد شہریوں معززین علاقہ اور تاجر برادری نے شرکت کی اور اسسٹنٹ کمشنر کو اپنے مطالبات اور اجتماعی منصوبوں کے حوالے سے تحریری طور پر بتایا گیا اے سی کہوٹہ رابعیہ سیال نے احتجاج کرنے والے شہریوں سے کہا کہ میونسپل کمیٹی کے فنڈز عوام کے فنڈز ہیں اور انکو اجتماعی کاموں پر ہی لگایا جائے گا میری پہلے ہی کوشش رہی ہے کہ کلر بائی پاس واٹر سپلائی اور شہر کی سڑکوں پر یہ فنڈز لگیں ابھی تک کوئی منصوبے فائنل نہیں ہوئے آپکی مشاورت سے کام ہوگا مجھ پر نہ کوئی دباؤ ہے اور نہ ہی میں کوئی دباؤ قبول کرونگی اے سی کہوٹہ کی یقین دہانی پر احتجاج ختم کیا گیا جبکہ بعد ازاں فرینڈز ہوٹل میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے ملک عبداالراؤف، راجہ عمران ستار ایڈووکیٹ، سابق پرنسل ناظم قمر اور دیگر نے کہا کہ اگر ہمارے مطالبات پر عمل در آمد نہ کیا گیا تو ہمارا احتجاج جاری رہیگا

Share.

Comments are closed.