گوجر خان میں سرگرم انسانی اسمگلرزکے خلاف کارروائی کی جائے عوامی سماجی حلقوں کا مطالبہ

0

گوجرخان (راجہ ارشد محمود) معصوم اور سادہ لوح لوگوں کو مستقبل کے سنہرے خواب دکھا کر اپنے جال میں پھنسانے کے بعد غیر قانونی طریقے سے بیرون ممالک بھیجنے والے انسانی سمگلروں کے خلاف کاروائی عمل میں لائی جائے عوامی سماجی حلقوں کا مطالبہ، تفصیلات کے مطابق گوجرخان شہر اور گردونواح میں بڑی تعداد میں انسانی سمگلر اور ایجنٹوں نے لوٹ مار مچا رکھی ہے، معصوم لوگوں کو جال میں پھنسا کر عمر بھر کی جمع پونجی سے محروم کرنے والے یہ ایجنٹ لوگوں کو سنہرے خواب دکھاتے ہیں اور غیرقانونی طریقوں سے بیرون ممالک بھیجتے ہیں مال بٹور رہے ہیں ، غیرقانونی طریقے سے باہر بھیجنے والے ان انسانی سمگلروں کے بڑے نیٹ ورک میں چند روز قبل گوجرخان شہر کی نواحی آبادی بڑکی جدید کا رہائشی 35سالہ نوجوان پانچ بچوں کا باپ مرزا غلام فرید بھی لیبیا کے مقام پر کشتی ڈوبنے کے واقعہ میں اپنی زندگی کی بازیرہے ، اس کی میت تاحال وطن نہ لائی جا سکی ہے ، اہل خانہ بیوی بچے فرید کی موت کی خبر سن کر شدت غم سے نڈھال ہیں ، پھول جیسے بچے آج بھی والد کی واپسی کے انتظار میں ہیں ، جبکہ بیوی غم کی تصویر بنی ہوئی ہے ، بوڑھی والدہ نوجوان بیٹے کے موت پر شدت غم سے نڈھال ، تمام اہل خانہ سخت غم زدہ ہے ، عوامی سماجی حلقوں نے ایف آئی اے اور دیگر محکموں سے مطالبہ کیا ہے کہ گوجرخان میں اس وقت انسانی سمگلروں اور ان ایجنٹوں کا نیٹ ورک موجود ہے جس کے سبب ایجنٹ گلی محلے تک بیٹھے ہوئے ہیں اور معصوم لوگوں کو مالی جانی نقصان پہنچا رہے ہیں اس نیٹ ورک کا مکمل توڑ کر کے ان ایجنٹوں کو کیفر کردار تک پہنچایا جائے

Share.

Comments are closed.