تهانہ کہوٹہ کے محلہ جامع مسجد میں بهی 7 سالہ معصوم بچے کے ساته زیادتی کا واقعہ سامنےآگیا

0

کہوٹہ(ساجدجنجوعہ) تهانہ کہوٹہ کے محلہ جامع مسجد میں بهی 7 سالہ معصوم بچے کے ساته زیادتی کا واقعہ سامنےآگیا. پولیس تهانہ کہوٹہ نے مقدمہ درج کرکے ملزم گرفتار کرلیا. تفصیلات کے مطابق محلہ جامع مسجد کہوٹہ کے رهائشی ساجد محمود نے تهانہ کہوٹہ میں درخواست دی کہ میں نماز مغرب پڑهنے کے بعد جامع مسجد سے واپس گهر آرها تها تو احمد گلریز نے مجهے بتایا کہ منیب عرف مانی ولد شبیر احمد سکنہ محلہ راجگان کہوٹہ نے میرے 7 سالہ بیٹے عبداللہ کے ساته زبردستی بد فعلی کی هے اور موقع سے فرار هو گیا هے جس پر پولیس تهانہ کہوٹہ نے زیر دفعہ 377/367اے درج کر لیا. ایس ایچ او تهانہ کہوٹہ بشارت محمود عباسی نے سب انسپکٹر سردار انصر محمود ، اے ایس آئی عامر صدیق اور دیگر پر مشتمل ٹیم تشکیل دی جس نے فوری کاروائی کرتے هوئے ملزم کو فوری طور پر گرفتار کرلیا. عوامی سیاسی و سماجی حلقوں نے واقعہ پر سخت غم و غصہ کااظہار کرتے هوئے ملزم کو قرار واقعی سزا دینے کا مطالبہ کیا هے. جبکہ عوامی حلقوں نے ایس ایچ او تهانہ کہوٹہ بشارت محمود عباسی اور ان کی پوری ٹیم کو بروقت کاروائی کرکے ملزم گرفتار کرنے پر خراج تحسین پیش کیا هے.متاثرہ بچے عبداللہ کے والد ساجد محمود نے میڈیا سے گفتگو کرتے هوئے پولیس تهانہ کہوٹہ کے ایس ایچ او بشارت محمود عباسی ،سب انسپکٹر سردار انصر محمود ، اے ایس آئی عامر صدیق اور دیگر پولیس اهلکاروں کی تعریف کرتے هوئے کہا کہ پولیس نے بروقت کاروائی کرتے هوئے ملزم کو گرفتار کرکے فرض شناسی کا مظاهرہ کیا هے ،میری آر پی او راولپنڈی فخر وصال سلطان راجہ ،سی پی او راولپنڈی اسراراحمد خان عباسی اور دیگر اعلی حکام سے ایس ایچ او تهانہ کہوٹہ سمیت دیگر پولیس اهلکاروں کیلئے خصوصی انعام دینے کا مطالبہ کیا.

Share.

Comments are closed.